• ارشد شریف قتل کیس: سپریم کورٹ کا ایس جے آئی ٹی بنانے کا حکم

    اشتہارات
  • اپوزیشن ناکام، منی بجٹ اور سٹیٹ بینک ترمیمی بل منظور

    ومی اسمبلی کے اجلاس کے دوران اپوزیشن راستہ روکنے میں ناکام ہو گئی، منی بجٹ اور سٹیٹ بینک ترمیمی بل 2022ء کو منظور کر لیا گیا، حزب اختلاف کی تمام ترامیم مسترد کر دی گئیں، زبانی رائے شماری پر اعتراضات نظر انداز ہونے پر ارکان پلے کارڈ لیکر کھڑے ہوگئے۔ اسی دوران ہنگامہ بھی ہوا جبکہ حزب اختلاف نے سپیکر ڈائس کا گھیراؤ کیا۔ ایجنڈے کی کاپیاں پھاڑ دیں، حکومتی ارکان نے وزیراعظم عمران خان کو حصار میں لے لیا۔

    قومی اسمبلی کا اجلاس سپیکر اسد قیصر کی زیر صدارت ہوا، اجلاس میں وزیراعظم عمران خان نے بھی شرکت کی۔ ان کی آمد پر ارکان اسمبلی نے ڈیسک بجا کر استقبال کیا جبکہ اپوزیشن نے وزیراعظم کیخلاف نعرے لگائے۔

    قومی اسمبلی ایوان اس وقت 342 ارکان پر مشتمل ہے، حکومت کے پاس 182 ارکان جبکہ اپوزیشن کے پاس 160ارکان ہیں، اپوزیشن کے 12 اور حکومت کے 12 ارکان ایوان سے غیر حاضر رہے۔ حکومت کو ایوان پر 18 ارکان کی برتری حاصل رہی۔

    اجلاس کے دوران ضمنی بجٹ پر پیپلز پارٹی نے ترمیم پیش کی جبکہ سپیکر نے ترمیم پر زبانی رائے شماری دی جسے اپوزیشن نے چیلنج کیا، سپیکر کی ترمیم کے حق میں ووٹ دینے والوں کو کھڑے ہونے کی ہدایت کی، سپیکر کی ہدایت پر پیپلز پارٹی کی ترمیم پر گنتی کی گئی ہے۔ ترمیم کےحق میں 150 جبکہ مخالفت میں 168 ووٹ پڑے۔

    79 مناظر